بھارت سب سے بڑی اقلیت مسلمانوں کے حقوق کا احترام کرے، اقوام متحدہ

اقوام متحدہ کی انسانی حقوق کی سربراہ مشعل بیچلے نے بھارت پر زور دیا کہ اپنی سب سے بڑی اقلیت مسلمانوں کے حقوق کا احترام کرے۔ انہوں نے بھارت سے انسانی حقوق کی تنظیموں اور اس کے کارکنوں کو تحفظ فراہم کرنے کا بھی مطالبہ کیا۔

اقوام متحدہ نے کہا کہ بھارت سب سے بڑی اقلیت مسلمانوں کے خلاف امتیازی رویہ بند کرے اور انہیں مذہبی آزادی دی جائے۔

اقوام متحدہ کی انسانی حقو کے ہائی کمیشن کے ترجمان روپرٹ کول وائل نے کہا کہ بھارت نے حال ہی میں انسانی حقوق کی این جی اوز سے متعلق سخت قوانین بنائے ہیں جس کے بعد ان تنظیموں کا بھارت میں کام کرنا ناممکن ہو گیا ہے۔ بھارت نے غیر ملکی فنڈز سے چلنے والی این جی اوز کو اپنا کام بند کرنے کا قانون جاری کر دیا ہے۔

انہوں نے مودی حکومت کے فارن کنٹریبیوشن ریگولیشن ایکٹ کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ اس قانون میں انتہائی بُری زبان استعمال کی گئی ہے جس سے غیر ملکی فنڈنگ سے چلنے والی این جی اوز کے لئے کام کرنا ممکن نہیں رہا۔

انہوں نے بھارت سے عوامی حقوق کو تحفظ فراہم کرنے کا مطالبہ بھی کیا۔

مودی حکومت نے کئی غیر ملکی این جی اوز کے دفاتر پر چھاپے مارے، ان کے بینک اکاوٗنٹس مجمد کر دیئے گئے اور ان کی رجسٹریشن منسوخ کر دی گئی ہے۔ ان تنظیموں میں اقوام متحدہ سے منسلک کئی سول سوسائٹی تنظیمیں بھی شامل ہیں۔

بھارت نے این جی اوز کے خلاف بنائے سخت قانون کے خلاف ہونے والے احتجاجی مظاہروں میں اب تک 1500 افراد کو گرفتار کر لیا ہے۔ اقوام متحدہ نے کہا کہ بھارت عالمی سطح پر تسلیم کئے گئے انسانی حقوق کی پامالی کر رہا ہے۔

Read Previous

اسرائیل کا غزہ میں حماس کے ٹھکانوں پر فضائی حملہ

Read Next

ترکی: پولیس نے 220 کلو کوکین قبضے میں لے لی

Leave a Reply