یوکرین نے اناج معاہدے کے تحت پہلے ہفتے میں 3 لاکھ 70 ہزار ٹن اناج برآمد کیا،اقوام متحدہ

اقوام متحدہ کا کہنا ہے کہ یوکرین نے اناج معاہدے کے تحت پہلے ہفتے میں تقریبا 40 ہزار ٹن اناج برآمد کیا۔

جوائنٹ کو آرڈینیشن سینٹر میں اقوام متحدہ کے عبوری کوآرڈینیٹر نے نیویارک میں صحافیوں کو بتایا  کہ 3 لاکھ 70 ہزار میٹر ٹن سے زیادہ اناج اور دیگر کھانے پینے کی اشیاء لے جانے ولے 12 جہازوں کو یوکرین کی بندرگاہوں سے نکلنے کی اجازت دے دی گئی ہے۔

فریڈرک کینی کا کہنا تھا کہ ہم نے جہاز کے مالکان کی طرف سے اس ٹرانزٹ کے لیے ان کی رضامندی کے حوالے سے زبردست دلچسپی دیکھی ہے۔ہم توقع کر رہے ہیں کہ درخواستوں میں ایک بڑا اضافہ دیکھنے کو ملے گا۔

اناج کے کئی خالی کنٹینرترکیہ کے بندرگاہوں پر معاہدےکرنے کے انتظار میں بیٹھے ہیں۔ انہوں نے مزید کہا کہ ایک بار جب ان کے سودے طے ہو جائیں گے، تو وہ شمال کی طرف روانہ کر دیے جائیں گے۔

یوکرین کی جانب سے گندم کی پہلی کھیپ اگلے ہفتے متوقع ہے۔

یوکرین کی بندرگاہوں سے روانہ ہونے والے جہاز مکئی اور دیگر اشیائے خوردونوش سے لدے ہوئے ہیں اور اگلے ہفتے یوکرائنی گندم کی پہلی کھیپ متوقع ہے۔

کینی نے مزید کہا کہ ہم نے اصل میں اندر جانے والے پہلے جہاز کو کلیئر کر دیا ہے جو ہمارے ریکارڈ کے مطابق گندم اٹھانے جا رہا ہے اور یہ اگلے ہفتے کسی وقت بھی پہنچ سکتا ہے۔

ترکیہ، اقوام متحدہ، روس اور یوکرین نے 22 جولائی کو تین یوکرائنی بندرگاہوں – اوڈیسا، چورنومورسک اور یوزنی – کو دوبارہ کھولنے کے لیے ایک تاریخی معاہدے پر دستخط کیے جو روس اور یوکرائن کی جاری جنگ کی وجہ سے مہینوں سے پھنسے ہوئے تھے۔

Read Previous

ترک کمپنی عراق ائیرپورٹ کی مرمت کا کام کریں گی

Read Next

پاکستان اور ترکیہ کے درمیان تعلقات میں اہم پیش رفت، فری ٹریڈ معاہدہ طے پا گیا

Leave a Reply