fbpx

ترکی: معروف عالم دین اور محدث محمد امین سراجؒ کی نماز جنازہ ادا کر دی گئی

ترکی کے معروف عالم دین اور محدث محمد امین سراجؒ کی نماز جنازہ آج استنبول میں ادا کی گئی۔ نماز جنازہ استنبول کی تاریخی فاتح مسجد میں ادا کی گئی۔ صدر رجب طیب ایردوان اور ان کی کابینہ سمیت ترکی کے تمام مکاتب فکر کے علما اور عوام کی بڑی تعداد نے نماز جنازہ میں شرکت کی۔

صدر ایردوان نے اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ترکی آج ایک بہت بڑے عالم دین اور محدث سے محروم ہو گیا ہے۔ محمد امین سراجؒ کی دین کے لئے خدمات کبھی فراموش نہیں کی جا سکتیں۔ ترکی میں طاغوتی طاقتوں کے خلاف محمد امین سراجؒ ایک بہت بڑا بند تھے۔

صدر ایردوان نے کہا کہ جب وہ اسکول میں طالب علم تھے اس وقت سے وہ محمد امین سراج کی تعلیمات سے فیض یاب ہوئے۔ ترکی میں عربی زبان کے دورباہ احیا اور عوام میں اسلامی اقدار کو زندہ کرنے میں محمد امین سراج نے مرکزی کردار ادا کیا۔

انہوں نے محمد امین سراج کے طالب علموں پر زور دیا کہ وہ اپنے استاد محترم کے نقش قدم پر آگے بڑھیں  اور ان کی تعلیمات کو مزید لوگوں تک پہنچائیں۔

صدر ایردوان نے کہا کہ وہ محمد امین سراجؒ کی رحلت پر انتہائی افسردہ ہیں۔

محمد امین سراج نے 92 برس کی عمر پائی اور تمام زندگی قرآن اور حدیث کی تعلیم کے لئے وقف کر دی تھی۔

ozIstanbul

پچھلا پڑھیں

امریکی بدنام زمانہ بلیک واٹر نے دو بار لیبیا کی حکومت الٹانے کی کوشش کی، اقوام متحدہ

اگلا پڑھیں

پاک ترک مشترکہ فوجی مشقیں اختتام پذیر ہو گئیں

تبصرہ شامل کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے