fbpx
ozIstanbul

پاکستان پر سفری پابندیوں میں نرمی پر کام کررہے ہیں، سعودی وزیر خارجہ

وزیراعظم عمران خان سے سعودی وزیرخارجہ شہزادہ فیصل بن فرحان آل سعود سے ملاقات کی۔

وزیر اعظم عمران خان نے وزیراعظم ہاؤس پہنچنے پر سعودی وزیر خارجہ کا پرتپاک استقبال کیا۔

ملاقات میں وزیراعظم نے پاکستان سعودی عرب سپریم کوآرڈینیشن کونسل کی فعالیت پراطمینان کااظہارکیا۔

اس موقع پر وزیراعظم کا کہنا تھاکہ پاک سعودیہ سپریم کوآرڈینیشن کونسل تعلقات کی بہتری کیلئےکام کرے گی۔

ان کا کہنا تھاکہ افغان تنازع کے حل کیلئے تمام فریقین تعمیری کردار ادا کریں، افغان مسئلے کا حل خطے میں امن و سالمیت کیلئے ضروری ہے۔

سعودی وزیرخارجہ کا کہنا تھاکہ پاکستان اور سعودی عرب کے برادرانہ تعلقات ہیں، پاک سعودی تعلقات مزیدمضبوط ہوں گے۔

صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی سے سعودی وزیر خارجہ فیصل بن فرحان السعود سے ایوان صدر میں ملاقات کی۔ ملاقات میں پاکستان اور سعودی عرب کے درمیان باہمی دلچسپی کے تمام شعبوں میں تعلقات کی موجودہ سطح کو وسعت دینے پر اتفاق کرتے ہوئے تجارت اور معیشت کے شعبے میں مزید پیش رفت کیلئے دوطرفہ تعلقات کو ادارہ جاتی سطح پر استوار کرنے کے عزم کا اعادہ کیا ہے۔

صدر مملکت نے سعودی وزیر خارجہ کا خیر مقدم کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان سعودی عرب کے ساتھ تعلقات کو خصوصی اہمیت دیتا ہے اور برادر ملک کے ساتھ معاشی اور تجارتی تعلقات بڑھانے کا خواہاں ہے۔

انہوں نے کہا کہ سعودی قیادت کا وژن 2030ء، سرسبز سعودی عرب اور سرسبز مشرق وسطیٰ منصوبے لائقِ تحسین ہیں۔ صدر مملکت نے کہا کہ کورونا کے دوران پاکستانی کمیونٹی کا خیال رکھنے پر سعودی قیادت کے شکر گزار ہیں، عالمی وبا کے دوران حج کے کامیاب انتظامات پر سعودی حکومت مبارکباد کی مستحق ہے۔

صدر مملکت نے ملاقات میں بھارتی غیر قانونی مقبوضہ جموں و کشمیر میں معصوم مسلمانوں پر بھارتی ظلم و ستم پر روشنی ڈالی اور کہا کہ بین الاقوامی برادری کشمیر میں بھارتی انسانی حقوق کی خلاف ورزیاں رکوائے اور اقوام متحدہ کی قراردادوں کے مطابق کشمیریوں کو خود ارادیت دینے کے لئے کردار ادا کرے۔

چیف آف آرمی اسٹاف جنرل قمر جاوید باجوہ سے سعودی عرب کے وزیر خارجہ شہزادہ فیصل بن فرحان السعود نے ملاقات کی۔

ملاقات میں دوطرفہ دلچسپی کے امور ، افغانستان امن عمل سمیت خطے میں سلامتی کی بدلتی ہوئی صورتحال اور علاقائی امن و رابطہ کاری کے لئے باہمی تعاون پر تبادلہ خیال کیا گیا۔

پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ کے مطابق سعودی وزیر خارجہ نے پاکستان کو غیر متزلزل حمایت کی یقین دہانی کرواتے ہوئے خطے میں امن و استحکام کے فروغ کے لئے پاکستان کی مخلصانہ کوششوں اور کردار کی تعریف کی۔

اس موقع پر آرمی چیف نے کہا کہ کے سعودی عرب اور پاکستان کے مابین بھائی چارہ اور باہمی اعتماد پر مبنی تعلقات قائم ہیں اور دونوں ممالک امن اور استحکام کے لئے اپنا کردار ادا کرتے رہیں گے۔ انہوں نے پاکستان اور اس کی مسلح افواج کے لئے کے سعودی عرب کی حمایت پر سعودی قیادت کا شکریہ ادا کیا۔

وزیر خارجہ مخدوم شاہ محمود قریشی سے ان کے سعودی ہم منصب شہزادہ فیصل بن فرحان آل سعود سے وزارتِ خارجہ میں ملاقات کی۔بات چیت کے دوران دو طرفہ تعلقات ،مختلف شعبہ جات میں دو طرفہ تعاون کے فروغ سمیت باہمی دلچسپی کے امور پر تبادلہ خیال کیا گیا۔

شاہ محمود قریشی نے کہاکہ پاکستان اور سعودی عرب کے مابین دو طرفہ گہرے برادرانہ مراسم ہیں – جن کی بنیاد یکساں مذہبی، ثقافتی اور تاریخی اقدار پر استوار ہے۔انہوں نے کہا کہ اہم بات یہ ہے کہ دونوں ممالک نے ہمیشہ ہر کڑے وقت میں ایک دوسرے کا بھرپور ساتھ دیا ہے۔پاکستانیوں کا ، سعودی عرب کی قیادت اور عوام کے ساتھ قلبی لگاؤ ہے۔پاکستان، سعودی عرب کی خود مختاری اور علاقائی سالمیت کے تحفظ کی حمایت جاری رکھنے کیلئے پر عزم ہے۔

دونوں وزرائے خارجہ نے پاکستان اور سعودی عرب کے مابین، سپریم رابطہ کونسل کو دو طرفہ تعلقات کے فروغ کیلئے احسن اقدام قرار دیا۔وزیر خارجہ نے کہا کہ پاکستان، مارچ 2022 کو اسلام آباد میں، او آئی سی، وزرائے خارجہ کونسل کے اگلے اجلاس کی میزبانی کیلئے پر عزم ہے۔

پچھلا پڑھیں

ترک وزیر خارجہ میلوت چاوش اولو کا تیونس کے وزیر خارجہ سے ٹیلی فونک رابطہ

اگلا پڑھیں

پاک افغان تعلقات کے منفی تاثر کو ختم کرنے میں میڈیا کا کردار کلیدی ہے، پاک افغان یورتھ فورم کی میڈیا کانفرنس میں اتفاق

تبصرہ شامل کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے