زیرو ویسٹ منصوبے کے تحت 5 لاکھ ری سائیکل شدہ نوٹ بکس بچوں میں تقسیم

استنبول کی ایسنلر بلدیہ نے ایک تقریب منعقد کی جس میں ترکی کے زیرو ویسٹ منصوبے کے تحت 5 لاکھ ری سائیکل شدہ نوٹ بکوں کو بچوں میں تقسیم کیا گیا۔

وزیر ماحولیات و شہریت مرات کرم نے بھی اس تقریب میں شرکت کی۔

 اس تقریب میں پلاسٹک والی کرسیوں سے لے کر ڈٹرجنٹ تک ری سائیکل مواد کے استعمال سے تیار کی جانے والی متعدد دوسری مصنوعات تقسیم کی گئیں۔

وزیر ماحولیات و شہریت مرات کرم کا کہنا ہے کہ  2023 تک ، ہم اپنے پلاسٹک اور دھات کے پلاسٹک ، گتے اور کاغذ کو جمع کرکے اپنی ری سائیکلنگ کی شرح کو 35فیصد  تک بڑھا دیں گے ، اور ہم ان حاصل شدہ مواد کو پیداوار میں استعمال کریں گے۔

انہوں نے آگاہی اور اس طرح کے منصوبوں کی پیش قدمی کرنے پر ایسنلر  کےمیئر تیفک گوکسو کا شکریہ ادا کیا۔

انہوں نے مزید کہا کہ میونسپلٹی کے کل فضلہ کا 10فیصدری سائیکل ہو چکا ہے۔

انہوں نے کہا کہ ہم نے یہ پروجیکٹ ایسنلر میں شروع کیا ہے ، لیکن اس کے بعد ، ہم اس اسکول کو استنبول گورنری کے تعاون سے تمام اسکولوں میں نافذ کریں گے۔

ترکی نے عوام میں ری سائیکلنگ متعارف کروانے اور بڑھتی آلودگی کے بارے میں شعور اجاگر کرنے کے لئے تین سال قبل   زیرو ویسٹ پراجیکٹ کا آغاز کیا تھا۔ اس ملک نے ٹن پلاسٹک کی بچت کی ہے اور سمندروں کو صاف ستھرا کردیا ہے ، ہزاروں عمارتیں ، رہائش گاہیں اور کمپنیاں اپنی فضلہ ضائع کرنے کی پالیسیوں پر ریسائکلنگ پر عمل پیرا ہیں۔

ماحولیاتی فوائد کے علاوہ ، اس منصوبے کے تحت ملک کو سالانہ 20 بلین کی بچت اور تخمینے کے مطابق 2023 تک 1 لاکھ افراد کے لئے ملازمتیں بھی پیدا ہو سکیں گی ۔

استنبول کے گورنر علی نے کہا کہ استنبول میں تمام سرکاری اداروں اور تنظیموں کے ساتھ ساتھ اسکولوں ، یونیورسٹیوں اور منظم صنعتی زون انتظامیہ نے 2018 سے زیرو ویسٹ انفارمیشن سسٹم میں داخلہ لیا ہے ، انہوں نے مزید کہا کہ 14،000 سے زیادہ اداروں کو اعلی سطح پر ترقی دی گئی ہے۔

انہوں نے ریسائکلنگ مہم میں خاتون اول ارمینہ ایردوان کے مدد کو بھی سراہا۔

خاتون اول نے زیرو ویسٹ بلیو سمیت متعدد مہمات شروع کرکے زیرو ویسٹ منصوبے میں حصہ لیا۔ اس مہم کی بدولت فروری 2019 اور فروری 2020 کے درمیان پانی اور ساحل سے 180،000 مکعب میٹر کچرا جمع کیا گیا۔

Read Previous

ترکی میں فٹ بال کی تصویری نمائش کا آغاز

Read Next

ترکی: بے روزگاری 13.4 فیصد اور کرنٹ اکاوٗنٹ خسارہ 4.6 ارب ڈالر تک پہنچ گیا

Leave a Reply