ozIstanbul

افغانستان:طالبان حکومت کی عالمی برادری سے امداد کی اپیل

افغان طالبان نے ملک میں ہولناک زلزلے کے بعد عالمی برادری سے امداد کی اپیل کردی۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق افغانستان کے مشرقی صوبے پکتیکا میں آنے والے 6.1 شدت کے زلزلے کے نتیجے میں اب تک ایک ہزار سے زائد افراد ہلاک ہوچکے ہیں جب کہ 1500 سے زائد زخمی ہیں۔

افغان حکام نے زلزلے کے نتیجے میں ہلاکتوں کی تعداد میں مزید اضافے کا خدشہ ظاہر کیا ہے۔

افغان حکومت نے زلزلے کے بعد ایک ہنگامی اجلاس میں امدادی کاموں کے لیے 100 ملین افغانی 11 لاکھ ڈالر کی منظوری دی لیکن افغانستان کی موجودہ معاشی صورتحال کے باعث زلزلہ متاثرین کے امدادی کاموں میں شدید مشکلات کا سامنا ہے۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق افغان طالبان کے سپریم لیڈر نے اس صورتحال میں عالمی برادری سے مدد کی اپیل کی ہے۔

افغان طالبان کے سپریم لیڈر ملا ہیبت اللہ اخونزادہ نے کہا کہ ہم عالمی برادری، تنظیموں اور بحرانی کیفیت میں کام کرنے والی ایجنسیوں سے اس تباہ کن صورتحال میں افغان عوام کی مددکی اپیل کرتے ہیں لہٰذا اس صورتحال میں جتنا ممکن ہوسکے افغان عوام کی مدد کی جائے۔

میڈیا رپورٹس کےمطابق افغانستان میں اس زلزلے کو 1998 کے 6.5 شدت کے زلزلے کے بعد بدترین زلزلہ قرار دیا جارہا ہے جس میں 4 ہزار سے زائد افراد ہلاک ہوئے تھے۔

پچھلا پڑھیں

استنبول: روس، یوکرین مذاکرات کامیاب ہوئے تو اناج راہداری کے لیے ‘کنٹرول سینٹر’ قائم کیا جائے گا

اگلا پڑھیں

سعودی ولی عہد محمد بن سلمان کا ترکیہ کا تاریخی دورہ

تبصرہ شامل کریں