fbpx
ozIstanbul

دنیا میں امن و استحکام صرف اسلاموفوبیا کے خاتمے سے ہی ممکن ہے، صدر ایردوان

صدر رجب طیب ایردوان نے کہا ہے کہ دنیا میں امن و استحکام کی ضمانت صرف اسلاموفوبیا کے خاتمے سے ہی ممکن ہے۔ انقرہ میں میڈیا اینڈ اسلاموفوبیا سمپوزیم سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے اسلاموفوبیا سے متاثرہ ممالک کو ایک مضبوط مواصلاتی نیٹ ورک قائم کرنے کی ضرورت پر زور دیا۔

صدر ایردوان نے کہا کہ دنیا کو امن اور استحکام دینے کے لئے ضروری ہے کہ مشترکہ سوچ کے تحت اسلاموفوبیا کے خاتمے کی کوششیں کی جائیں تاکہ انسانیت کو امن مل سکے۔ دنیا کے کئی ممالک میں اسلاموفوبیا کینسر کی طرح تیزی سے پھیل رہا ہے۔

انہوں نے کہا کہ مغربی ممالک کی دھمکیوں سے مسلم دنیا مرعوب نہیں ہو گی۔ جن میں مسلمان نسل پرستانہ اور امتیازی سلوک سے متاثر ہو رہے ہیں انہیں اسلاموفوبیا کے خلاف مشترکہ جدوجہد کرنا ہو گی۔ بعض ممالک اسلاموفوبیا کے خطرے کو آسان سمجھ رہے ہیں لیکن یہ دنیا کے امن کے لئے انتہائی خطرناک ہے۔

صدر ایردوان نے کہا کہ نائن الیون کے واقعے کے بعد امریکہ نے دنیا بھر میں مسلمان اور اسلام دشمنی کا بیج بویا جس نے ایک وائرس کی شکل اختیار کر لی۔ دنیا کے کئی معاشروں کے ثقافتی ڈھانچوں میں پہلے سے اسلام دشمنی کی جڑیں پھیلی ہوئی تھیں ان ممالک میں یہ وائرس تیزی سے پھیلا اور آج دنیا کا امن اسلاموفوبیا کی وجہ سے خطرے سے دوچار ہے۔

یہ سمپوزیم ریڈیو اینڈ ٹیلی ویژن سپریم کونسل، ترکی کے صدارتی دفتر کے محکمہ مذہبی امور، ایرسیز یونیورسٹی، ٹرکش ریڈیو اینڈ ٹیلی ویژن کارپوریشن (ٹی آر ٹی) اور انقرہ میں موجود تھنک ٹینک سیتا فاؤنڈیشن کے تعاون سے منعقد کیا گیا۔

پچھلا پڑھیں

ترک بحریہ کی مشرقی بحیرہ روم میں مشقوں کا آغاز

اگلا پڑھیں

اسرائیل جیسی ریاستوں کو لگام ڈالنے کیلئے ورلڈ آرڈر میں تبدیلی ناگزیر ہے،بین الاقوامی سیمینار سے مقررین کا خطاب

تبصرہ شامل کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے