سری لنکا کے قائم مقام صدر رانیل وکرما سنگھے نے ملک میں ایمرجنسی نافذ کر دی

شدید معاشی و سیاسی بحران سے دوچار سری لنکا کے قائم مقام صدر رانیل وکرما سنگھے نےملک میں ہنگامی حالت کے نفاذ کا اعلان کر دیا ہے ۔

جس کا مقصد ملک میں بڑھتی ہنگامہ آئی کو روکنا اور معیشت میں بہتری کے لئے درکار اقدامات اٹھاناہے۔

سری لنکن حکومت کی جانب سے اتوار اور پیر کی درمیانی شب جاری کیے جانے والے بیان میں کہا گیا ہے کہ یہ اقدام معاشی بحران اور افراتفری سے نمٹنے کے لیے کیا گیا ہے۔

حکومت کا کہنا ہے کہ عوام کی سلامتی، امن عامہ کے تحفظ، ضروریات زندگی کی فراہمی بحال کرنے اور سروسز کی بحالی کے لیے یہ قدم اٹھایا گیا ہے۔

دوسری جانب سابق صدر کے ملک سے نکل جانے کے بعد رپورٹ سامنے آئی تھی کہ وہ مالدیپ پہنچ گئے جہاں سے وہ سنگاپور گئے اور وہیں سے ہی جمعے کو ای میل کے ذریعے سپیکر پارلیمنٹ کو استعفٰی بھجوا دیا تھا۔

جس کے نتیجے میں سری لنکن پارلیمنٹ نےہفتہ کےروز نئے صدر کے انتخاب کے عمل کا آغاز کر دیا تھا جبکہ عوام کو ریلیف دینے کے لیے کچھ اقدامات کا اعلان بھی کیا گیا۔

مزید براں نئے صدر کے انتخاب کے لئے کاغذات نامزدگی کل19جولائی کو جمع ہونگے ۔

جبکہ صدر کا انتخاب 20جولائی کو ہوگا۔

 

Read Previous

یوکرینی صدر نے روس کے لئے جاسوسی کرنے پر انٹلی جنس چیف اور سٹیٹ پراسیکیوٹرکو برطرف کر دیا

Read Next

ترک مرکزی بینک کا شرح سود میں ردوبدل پر غورکے لئے اجلاس21جولائی کو ہوگا

Leave a Reply