fbpx
ozIstanbul

ترکی امریکہ سے مزید ایف 16 لیگا؟

اطلاعات کے مطابق ترکی نے امریکا کو 40 ایف-سولہ لڑاکا طیاروں کی خریداری کی درخواست دے دی ہے۔

یہ طیارے امریکی کمپنی لاک ہیڈ مارٹن تیار کرتی ہے۔

ان چالیس نئے طیاروں کے علاوہ ترکی نے موجودہ ایف 16 فلیٹ کو اپ گریڈ کرنے کے لیے امریکہ سے پارٹس اور اپ گریڈ کٹس کی درخواست بھی کی ہے۔

ترکی کی جانب سے یہ اقدام امریکا سے ایف-35 لڑاکا طیاروں کی خریداری میں ناکامی کے بعد سامنے آیا ہے۔

طیاروں کی خریداری کا یہ سمجھوتا اربوں ڈالر مالیت کا ہے۔ البتہ اس ریکوئسٹ پر امریکی ڈیپارٹمنٹ آف ڈیفنس اور اسکے بعد کانگریس کی منظوری کے بعد ہی کوئی پیش رفت ہوگی۔

امریکی ڈیپارٹمنٹ آف ڈیفنس کے ترجمان کا کہنا ہے کہ "وزارت کی پالیسی یہ ہے کہ کانگریس کو سرکاری طور پر نوٹفکیشن جاری ہونے سے قبل کسی بھی مجوزہ دفاعی فروخت کی تصدیق یا اس پر تبصرہ نہیں کیا جاتا” ترکی میں امریکی سفارت خانے نے اس حوالے سے تبصرہ کرنے سے انکار کر دیا۔

ترکی 100 سے زیادہ ایف-35 سٹیلتھ ایئرکرافٹ کی خریداری کا ارادہ رکھتا تھا۔ تاہم روس سے S-400 ایئر ڈیفنس سسٹم کی خریداری کے بعد ترکی کو 2019ء میں ایف-35 طیاروں کے پروگرام سےباہر کر دیا گیا تھا۔

حالانکہ اس سے متعلق ترکی 1.6 ارب ڈالر ادا کرچکا ہے۔ واشنگٹن کا کہنا ہے کہ روسی میزائل نظام امریکی ایف-35 طیارے اور دیگر امریکی سسٹمز سے ہم آہنگ نہیں اور روس کو اس نظام کی وجہ سے امریکی سسٹمز تک رسائی مل سکتی ہے۔

طیاروں کی خریداری کی اس نئی درخواست کو امریکی کانگریس کی جانب سے منظوری حاصل کرنے میں یقینی طور پر مشکل پیش آئے گی۔

پچھلا پڑھیں

روس: افغانستان پر ماسکو فارمیٹ اجلاس کا اعلامیہ جاری

اگلا پڑھیں

سعودی عرب کی رشیئن الیکٹرانک وارفیئر سسٹم میں دلچسپی

تبصرہ شامل کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے