fbpx
ozIstanbul

اسرائیلی جارحیت پر خاموش رہنے والے یاد رکھیں ان پر بھی یہ وقت آئے گا، ایردوان

صدر رجب طیب ایردوان نے کہا ہے کہ فلسطین میں  اسرائیلی ظلم و جبر کے خلاف اگر پوری دنیا خاموش بھی ہو جائے    تب   بھی ہم اس ظلم کے خلاف آواز اٹھاتے رہیں گے۔

صدر ایردوان نے بر سر اقتدار انصاف و ترقی پارٹی کے نمائندوں سے بذریعہ ویڈیو  کانفرنس خطاب کیا ۔

انہوں نے اپنے پیغام میں کہا کہ گزشتہ روز  شامی سرحد کے قریب    جس طرح سے ہم نے دہشتگردوں کا راستہ روکا اسی طرح مسجد الاقصی کی جانب بڑھتے ہوئے ہاتھوں کو بھی ہم روکیں گے، میں نے بعض  عالمی رہنماوں سے رابطہ کیا جنہوں نے ہمارے موقف کی مکمل تائید کی ہے۔

انہوں نے مزید  کہا کہ  اسرائیل کے فلسطینی شہروں اور القدس میں جاری مظالم کے خلاف آواز اٹھانا  ناموس انسانیت کا  فرض ہے، اسرائیل کی جانب سے بہائے جانے والے خون پر  سیاسی وجوہات کی بنا پر  خاموش رہنے والوں کو یہ یاد رکھنا چاہیئے کہ ایک دن ان پر بھی یہ وقت آ سکتا ہے

اگر ہم نے  آج اس کے خلاف آواز نا  اٹھائی تو  کل کو ہم اس ظلم کا شکار ہوں گے ۔ القدس، مسلمانوں کے ساتھ ساتھ مسیحیوں اور یہودیوں کے لیے بھی مقدس مقام ہے جہاں اسرائیل  نامی دہشتگرد  ریاست نےانسانیت سوزی  کی تمام حدیں پار  کر لی ہیں،میں  اقوام  عالم سے مطالبہ کرتا ہوں کہ وہ بلا امتیاز  اسرائیلی جارحیت کے خلاف متحد ہو جائیں ۔

 

پچھلا پڑھیں

کابل میں جمعے کی نماز کے دوران دھماکہ، 12 نمازی شہید

اگلا پڑھیں

اسرائیلی حملوں کے خلاف پاکستان میں آج یوم فلسطین منایا گیا

تبصرہ شامل کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے