ترکی میں 28 ہزار سال پرانے اونی میمتھ کی ہڈیوں کی نمائش

شمال مغربی ترکی کی یونورسٹی نے تقریبا 28 ہزار سال پہلے پائے جانے والے اونی میمتھ کی ہڈیوں کو نمائش میں پیش کیا۔

نمائش انتظامیہ کا کہنا تھا کہ یہ آثار قدیمہ 2020 میں صوبہ تیکردگ میں ریت اور بجری کی کانوں میں کھدائی کے دوران دیافت ہوئے تھے۔

تیکردگ نامک کمال یونیورسٹی کے زیر اہتمام نمائش میں زائرین فوسلز ، پتھروں ، چٹانوں دھاتوں اور سنگ مرمر کے نمونے جیسی مختلف اشیا سیکھ سکتے ہیں۔

یونیورسٹی کے شعبہ جغرافیہ کے سربراہ ایمرے اوزساہین نے کہا کہ اونی میمتھ – جو کہ جدید دور کے ہاتھیوں کے آباؤ اجداد کے طور پر جانے جاتے ہیں – ایک زمانے میں اس خطے میں رہتے تھے اور قریب ہی ہجرت بھی کرتے تھے۔

اوزساہین کے مطابق، ہڈیوں کی جانچ سے پتہ چلتا ہے کہ میمتھ تقریباً 23ہزار سے 28ہزار سال پہلے یہاں رہتے تھےاور دستیاب اعداد و شمار سے پتہ چلتا ہے کہ مقامی میمتھ یا تو یورپ یا جنوبی علاقوں میں ہجرت کر گئے تھے۔

انہوں نے مزید کہا کہ یہ خطہ جانوروں کے ساتھ ساتھ انسانوں کی نقل مکانی کے اہم راستوں میں سے ایک ہے۔

Read Previous

ترکی، ملائیشیا کی پولیس سروسز کا فرانزک تفتیش کے طریقوں پر تبادلہ خیال

Read Next

انقرہ: پاکستانی سفارتخانے میں آرمی پبلک اسکول کے شہدا کو خراج عقیدت پیش کرنے کی تقریب

Leave a Reply