fbpx
ozIstanbul

15جولائی: ترک سفارتخانے میں جمہوری یکجہتی کا دن منایا گیا

پاکستان میں ترک سفارتخانے کے تحت یوم جمہوریت اور قومی یکجہتی کے موقع پر 15 جولائی 016 کے شہدا کی یاد میں پروقار تقریب منعقد کی گئی ۔

ترک سفیر احسان مصطفی یُرداکل، پاکستان کے وزیر مملکت برائے اطلاعات فرخ حبیب،فلسطین کے سفیر احمد ربیع،ترک جمہوریہ شمالی قبرص کے اسلام آباد میں مقیم سفیر مہمت داولکو،پاکستان میں مقیم ترک شہریوں اور دیگر اہم شخصیات نے  تقریب میں شرکت کی۔

ترک سفیر احسان مصطفی یرداکل نے تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ 15 جولائی 2016 کو 251 ترک شہری اپنے حقوق کے دفاع اور جمہوریت کی بالا دستی کے لیے اپنی جان سے ہاتھ دھو بیٹھے ، انکا کہنا تھا کہ 15 جولائی کو ہونے والا واقعہ صرف ترکی ہی نہیں ہر اس قوم کے لیے خوشی کا دن ہے جو اپنے حق کے لیے لڑنا جانتی ہیں، یہ دن فتح کا دن ہے۔

ترک سفیر کا مزید کہنا تھا کہ دہشت گرد تنظیم فیٹو کا ترکی بھر پور طریقے سے مقابلہ کر رہا ہے، انہوں نے کہا کہ فیٹو دہشت گرد تنظیم سے صرف ترکی ہی نہیں بلکہ 160 ممالک اس دہشت گرد تنظیم سے لڑ رہے ہیں۔

ترک سفیر نے کہاکہ پاکستان 2016 میں ہونے والے اس حملے کے پہلے منٹ سے ہی ترکی کے ساتھ شانہ بشانہ کھڑا رہا ہے۔ پاکستان نے جلد ہی فیٹو کا اصل چہرہ بھانپ لیا تھا۔

انکا مزید کہنا تھا کہ 15 جولائی کی رات کو پاکستانی عوام بھی ترکی کا ساتھ دینے سڑکوں پر نکلے ، یرداکل نے کہا کہ پاکستان اور ترکی ہر مشکل وقت میں ایک  دوسرے کے ساتھ  ہوتے ہیں ۔

پاکستان کے وزیر مملکت اطلاعات و نشریات فرخ حبیب نے اپنے بیان میں کہا کہ پاکستانی حکومت اور عوام کو ترکی کے مشکل وقت میں اسکے ساتھ کھڑے ہونے پر فخر ہے۔

انکا مزید کہنا تھا کہ دونوں ممالک ماضی سے ہی دہشت گردی کا نشانہ بنتے آئے ہیں اور  دونوں ممالک نے دہشت گردی  سے چھٹکارا حاصل کرنے کی بہت بھاری قیمت چکائی ہے۔

وزیر مملکت کا کہنا تھا کہ فیٹو کو دہشت گرد تنظیم قرار دینا اور فیٹو سکولز کو ترک معارف فاونڈیشن میں تبدیل کرنا پاکستان کی ترکی کے ساتھ سچی دوستی اور عزم و ہمت کی مثال ہے۔

علاوہ ازیں فرخ حبیب نے ترکی کا کشمیر کے معاملے میں پاکستان کی مدد کا شکریہ  بھی ادا کیا ۔

پروگرام میں 15 جولائی کو ہونے والے تاریخ ساز جدوجہد پر مبنی واقعات کی تصاویری نمائش بھی کی گئی جسے مہمانوں نے بہت پسند کیا۔

پچھلا پڑھیں

پاکستانی وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کا اقوام متحدہ کی اقتصادی و سماجی کونسل سے خطاب

اگلا پڑھیں

واٹس ایپ نے 20 لاکھ بھارتی اکاؤنٹس بند کر دیے

تبصرہ شامل کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے