fbpx
ozIstanbul

افغانستان میں پاکستان کی مداخلت محض قیاس آرائی ہے، اس میں کوئی حقیقت نہیں، ذبیح اللہ مجاہد

طالبان ترجمان ذبیح اللہ مجاہد نے افغانستان میں پاکستان کی مداخلت کے الزام کو واضح طور پر رد کرتے ہوئے اسے پروپیگنڈا قرار دیا ہے۔

ذبیح اللہ مجاہد نے افغانستان کے دارالحکومت کابل میں پریس کانفرنس میں عبوری حکومت کے لیےکابینہ کے اراکین کے ناموں کا اعلان کیا۔

اس موقع پر ایک سوال کے جواب میں ذبیح اللہ مجاہد نے افغانستان کے معاملات بالخصوص پنجشیر میں پاکستان کے کردار کو رد کرتے ہوئے اسے افواہ قرار دیا۔

ذبیح اللہ مجاہد کا کہنا تھا کہ پنجشیر میں کوئی جنگ نہیں ہورہی ، وہاں مکمل امن ہے۔

طالبان ترجمان کا کہنا تھا کہ پاکستان کی مداخلت افواہ ہے، پاکستان کی مداخلت کی افواہیں دودہائیوں سے گردش کرتی آئی ہیں۔

ذبیح اللہ مجاہد کا کہنا تھا کہ ہم مکمل آزادی سےکام کرتے ہیں اور کسی کی مداخلت برداشت نہیں کرتے، ہم اس قابل ہیں کہ اپنے ملک پر قبضہ کرنے والوں کے خلاف لڑسکیں، ہم نے اسلام اور اس ملک کے لیے پوری دنیا سے جنگ لڑی ہے اور اس کے لیے بے شمار قربانیاں بھی دی ہیں۔

پچھلا پڑھیں

افغانستان کے عبوری نائب وزیراعظم ملا عبدالغنی برادر کی زندگی پر ایک نظر

اگلا پڑھیں

واٹس ایپ نے اپنی پرائیویسی میں مزید اضافہ کردیا

تبصرہ شامل کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے