turky-urdu-logo

انقرہ : سفارتخانہ پاکستان میں پاکستان کے قومی دن کی 84 ویں سالگرہ کی مناسبت سے استقبالیہ کا اہتمام

انقرہ میں سفارتخانہ پاکستان میں یوم پاکستان کی 84 ویں سالگرہ کی مناسبت سے استقبالیہ کا اہتمام کیا گیا۔

استقبالیہ میں  ترک وزیر برائے قومی دفاع  یاشر گلر اور ترکیہ کے وزیر تجارت پروفیسر ڈاکٹر عمر بولات نے بطور مہمان خصوصی شرکت کی۔

استقبالیہ میں ترک وزیر برائے قومی دفاع نے خطاب کرتے ہوئے دونوں ممالک کے درمیان  تعاون کی اہمیت کو اجاگر کیا۔انکا کہنا تھا کہ پاکستان اور ترکیہ کے درمیان اسٹریٹجک اور جامع دو طرفہ تعلقات علاقائی  اور عالمی سطح پر امن و استحکام کو فروغ دینے میں اہم کردار ادا کرتے ہیں۔

دوطرفہ تعلقات کی تاریخی اہمیت کو تسلیم کرتے ہوئے، ترکیہ کے وزیر تجارت پروفیسر ڈاکٹر عمر بولات نے پاکستان اور ترکیہ کے درمیان برادرانہ تعلقات کو مزید مضبوط کرنے کی اہمیت پر زور دیا۔

انہوں نے اس امید کا اظہار کیا کہ مشترکہ کوششوں اور باہمی مفادات پر مبنی یہ دوستی آئندہ برسوں میں مضبوط سے مضبوط تر ہوتی رہے گی۔

ترکیہ میں پاکستان کے سفیر ڈاکٹر یوسف جنید نے اپنے خطاب میں یوم پاکستان کی تاریخی اہمیت کو واضح کرتے ہوئے 23 مارچ 1940 کو دو قومی نظریہ کی بنیاد پر مسلمانوں کے لیے علیحدہ وطن کے قیام کے لیے منظور کی گئی قرارداد پر پر روشنی ڈالی۔

انہوں نے قائداعظم محمد علی جناح کی دور اندیش قیادت کو خراج تحسین پیش کیا اور پاکستان کو امن، ترقی اور انسانی وقار کے گڑھ میں تبدیل کرنے کے لیے پاکستان کی موجودہ قیادت کے عزم کا اعادہ کیا۔

پاکستان-ترکیہ بھائی چارے کی گہرائی پر روشنی ڈالتے ہوئے سفیر پاکستان نے اس بات کا اعادہ کیا کہ دونوں ممالک کے درمیان تعلقات "دل سے دل کے رابطے” اور "دو ممالک، ایک قوم” جیسے جذبات کی عکاسی کرتے ہیں۔

تقریب میں ترک پارلیمنٹ کے سابق سپیکر چیف آف ترک جنرل سٹاف ، ترک لینڈ فورسز کے کمانڈر جنرل ، ترک فضائیہ کے کمانڈر جنرل ، ترک بحریہ کے کمانڈر ، نائب وزیر خارجہ سمیت دیگر ترک رہنماوں نے شرکت کی۔

 

 

 

 

Alkhidmat

Read Previous

شب قدر

Read Next

فلسطین میں 2 لاکھ  مسلمانوں نے مقبوضہ مشرقی یروشلم میں مسجد الاقصیٰ میں شب قدر منائی

Leave a Reply