fbpx
ozIstanbul

افغانستان کی تاریخ میں پہلی بار خواتین کے لیے جم کھول دیا گیا

افغانستان کے شہر قندھار میں ایک خاتون کی جانب سے  خواتین کا  پہلا جِم کھولا گیا ہے۔

غیر ملکی میڈیا کے مطابق  ملک بھر میں بشمول فٹنس سینٹر مختلف شعبوں میں 890 خواتین کی جانب سےکاروبار کا آغاز کیا گیا ہے۔

جم کی مالکن نے طالبان کے حکومت کے ساتھ جاری مذاکرات پر خدشہ ظاہر کرتے ہوئے کہا کہ وہ اپنے کاروبار سمیت ایسے تمام شعبوں کے حوالے سے پریشان ہیں جہاں خواتین ملازمت کرتی ہیں۔

جم مالکن نے تشویش کا اظہار کیا کہ پتہ نہیں اگر طالبان کے حکومت کے ساتھ مذاکرات کامیاب ہوگئے  تو خواتین پر کونسی پابندیاں عائد کی جائیں گی کیونکہ خبروں کو دیکھ کر  تو یہی معلوم ہوا ہے کہ اس عرصے میں طالبان کی ذہنیت اور خیالات میں زیادہ تبدیلی  نہیں  آئی۔

جم میں کام کرنے والی ٹرینر کا کہنا تھا کہ یہاں کام کرنے سے  میں بہت خوش ہوں، جو تنخواہ وصول ہوتی ہے اس سے گھر میں مالی مدد مل جاتی ہے اور  جم میں دیگر خواتین کی مدد کرنے کے ساتھ خود کی ورزش بھی ہوجاتی ہے جوکہ صحت کیلئےکافی  مفید ہے

پچھلا پڑھیں

افغان مہاجرین اپنے ملک میں رہیں تو زیادہ بہتر ہے، پاکستانی قومی سلامتی کے مشیر

اگلا پڑھیں

ٹوکیو اولمپکس میں ترکی کی ایک اور بڑی کامیابی

تبصرہ شامل کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے