turky-urdu-logo

یروشلم کی حفاظت کا مطلب انسانیت اور امن کا دفاع ہے،صدر ایردوان

القدس کے لیے لیگ آف پارلیمنٹرینز کی 5ویں کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے صدر ایردوان نے کہا ہے کہ ہمیں مل کر کوشش کرنی چاہیے کہ ہمارے غزہ کے بھائیوں اور بہنوں کے سانحے کو پس پشت نہ ڈالا جائے۔

ترکیہ ہر حال میں اپنے غزہ اور فلسطین بھائیوں کے ساتھ کھڑا ہے۔

صدر ایردوان کا کہنا تھا کہ  یروشلم کا دفاع کرنے کا مطلب انسانیت، امن اور مختلف عقائد کے احترام کا دفاع ہے اور ترکیہ  اس جدوجہد کو عزم کے ساتھ جاری رکھے گا۔

انکا کہنا تھا کہ غزہ اس وقت بہت ہی نازک حالات سے گزر رہا ہے ، اسرائیل کی جانب سے قدم قدم پر قدیم شہر کی شناخت مٹائی جا رہی ہے۔

صدر ایردوان کا کہنا تھا کہ فلسطینی، جن کی زمینوں پر بتدریج قبضہ کیا جا رہا ہے، تاریخ کے سب سے وحشیانہ جبر کا نشانہ بن رہے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ یہاں سے میں ایک بار پھر فلسطینی ہیروز کو سلام پیش کرتا ہوں جنہوں نے اپنی جدوجہد کے ذریعے یروشلم اور پوری انسانیت کی عزت کو برقرار رکھا۔

انہوں نے مزید کہا کہ جدید فرعونوں کی تلاش میں کسی کو بھی دور دیکھنے کی ضرورت نہیں ہے، صرف ان لوگوں کو دیکھیں جنہوں نے گزشتہ 203 دنوں میں 35,000 فلسطینیوں کو بے رحمی سے قتل کیا ہے۔

صدر ایردوان  نے مزید کہا کہ نیتن یاہو نے ہٹلر کی طرح تاریخ میں اپنا نام غزہ کے قصاب کے طور پر شرمندہ تعبیر کیا ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ آج کے ہٹلر اور نازی قاتل ہیں جنہوں نے غزہ میں 15,000 سے زائد بچوں کو قتل کیا.

انہوں نے مزید کہا کہ نیتن یاہو کے ماتھے کا سیاہ داغ کبھی نہیں مٹے گا، چاہے وہ کچھ بھی کر لے۔

جیسا کہ غزہ میں فلسطینی تمام تر مشکلات کے باوجود 203 دنوں سے مزاحمت کر رہے ہیں، کوئی بھی ہم سے نسل کشی کے خلاف خاموش رہنے کی توقع نہیں کر سکتا.

ہم ان لوگوں میں شامل نہیں ہو سکتے جو حماس پر دہشت گرد تنظیم ہونے کا جھوٹا الزام لگاتے ہیں کیونکہ اسرائیل اور اس کے مغربی حامی ایسا چاہتے ہیں.

صدر ایردوان نے اس بات کا اعادہ کیا کہ ترکیہ ایک آزاد اور خودمختار فلسطینی ریاست کے قیام کے لیے اپنی کوششیں جاری رکھے گا جس کا دارالحکومت مشرقی یروشلم ہو۔

مزید براں صدر ایردوان نے القدس (یروشلم) کے لیے لیگ آف پارلیمنٹرینز کا شکریہ ادا کیا جو انسانیت اور امن کے لیے اس مبارک جدوجہد کی حمایت کرتی ہے۔

Alkhidmat

Read Previous

ترکیہ کی اکسا انرجی قازقستان میں گیس پلانٹ تعمیر کرے گی

Read Next

قارا گوز اور حاجی وات

Leave a Reply